جنوبی لبنان میں جنازے کےجلوس پرفائرنگ کے نتیجے میں حماس کے تین کارکن جاں بحق

جنوبی لبنان میں جنازے کےجلوس پرفائرنگ کے نتیجے میں حماس کے تین کارکن جاں بحق

لبنان میں فلسطینی تنظیم ’حماس‘ کے ایک رہ نما کے مطابق جنوبی لبنان میں فلسطینی پناہ گزین کیمپ کے ایک گودام میں دھماکے میں ہلاک ہونے والے جماعت کے ایک رکن کی نماز جنازہ کے دوران فائرنگ کے نتیجے میں حماس کے تین ارکان ہلاک ہو گئے۔
جنوبی لبنان میں ایک کیمپ میں جنازے کے دوران فائرنگ سے حماس کے 3 ارکان ہلاک ہو گئے۔
لبنان میں حماس کی قیادت کے ایک رکن رافت مرہ جو جنازے میں شریک تھے نے الزام لگایا کہ فتح قومی سلامتی کے عناصر نے سوگواروں پر گولی چلائی جب وہ قبرستان کے دروازے پر پہنچے۔ انہوں نے کہا کہ فائرنگ کے واقعے میں جماعت کے تین کارکن ہلاک ہوگئے۔ یہ واقعہ صور شہر کے شمالی ٹاور میں پیش آیا۔ واقعے میں جماعت کے چھ کارکن زخمی ہوئے ہیں۔
کیمپ کے ایک رہائشی نے بتایا کہ جب جنازہ کیمپ میں حماس اور فتح کے مسلح عناصر کے قریب پہنچا تو سوگواروں کی طرف فائرنگ کی گئی۔ ہمیں یہ نہیں معلوم کہ کون کس پر گولی چلا رہا ہے۔ واقعے کی تحقیقات کے لیے کمیٹی تشکیل دی گئی تھی، جس میں دونوں دھڑوں کے ارکان شامل ہیں۔
العربیہ/الحدیث کے ذرائع نے ہفتے کی شام کو اطلاع دی ہے کہ جنوبی لبنان کے شہر صور کے برج الشمالی کیمپ میں ہونے والے ایک دھماکے میں حماس کا بھرتی اہلکار ہلاک ہو گیا۔
قابل ذکر ہے کہ جمعہ کی شام جنوبی لبنان میں فلسطینی پناہ گزینوں کے کیمپ میں حماس کے گولہ بارود اور ہتھیاروں کے ڈپو میں زبردست دھماکہ ہوا جس میں متعدد افراد ہلاک اور زخمی ہوئے۔


آپ کی رائے

Leave a Reply

Your email address will not be published.

مزید دیکهیں