حرمین شریفین میں ماسک اور سماجی فاصلے کی پابندی دوبارہ نافذ کر دی گئی

حرمین شریفین میں ماسک اور سماجی فاصلے کی پابندی دوبارہ نافذ کر دی گئی

سعودی عرب کی وزارت اسلامی امور و دعوت و رہنمائی کا کہنا ہے کہ مساجد بشمول حرمین شریفین میں آنے والے کرونا ایس او پیز کی پابندی کرتے ہوئے ماسک اور سماجی فاصلے کا خیال رکھیں-
وزیر اسلامی امور ڈاکٹر عبداللطیف آل الشیخ نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کے کیسز بھی بڑھ رہے ہیں۔ وائرس کی نئی شکل اومیکرون کا خطرہ بھی ہے ان حالات کے پیش نظرمساجد میں آنے والوں کو چاہئے کہ وہ کرونا ایس او پیز کی پابندی کے سلسلے میں انتظامیہ سے بھرپور تعاون کریں۔
آل الشیخ نے مزید کہا کہ حفاظتی تدابیر کی پابندی کی بدولت لوگ وائرس کے خطرے سے محفوظ رہیں گے- اللہ تعالی کے فضل وکرم کے بعد ایس او پیز کی پابندی وائرس سے بچانے میں معاون ثابت ہوگی- سب لوگ فرض شناسی کا مظاہرہ کریں اور وطن عزیز کو وبا سے بچانے میں اپنا حصہ ڈالیں-
واضح رہے حرمین شریفین میں بھی نماز اور طواف کے لیے سماجی فاصلے کے اصول پر عمل دآمد کو دوبارہ شروع کر دیا گیا ہے۔ چند ماہ قبل کیسز میں کمی کی وجہ سے حرمین شریفین بالخصوص المسجد الحرام میں مکمل گنجائش کے مطابق لوگوں کو آنے کی اجازت دیتے ہوئے سماجی فاصلے کے اصول کو ختم کر دیا گیا تھا۔


آپ کی رائے

Leave a Reply

Your email address will not be published.

مزید دیکهیں